یش چوپڑہ نے سنیل دت سے شاہ رخ خان تک تمام معروف بالی ووڈ اداکاروں کو مختلف انداز میں پیش کر کے خوب نام کمایا

ممبئی:(یو این آئی)بالوووڈ میں کنگ آف رومانس یش چوپڑہ وکو ایک فلم ساز کے طور پر یاد کیا جاتا ہے جنہوں نے رومانی فلوں کے ذریعہ ناظرین کے درمیان اپنی ایک خاص شناخت بنائی۔ پنجاب کے لاہور میں 27ستمبر1932کو پیدا ہوانے والے یش چوپڑہ کے بڑے بھائی بی آر چوپڑہ فلم انڈسٹری کے جانے مانے پروڈیوسر و ڈائرکٹر تھے۔اپنے کریئر کے ابتدائی دور میں یش چوپڑہ نے آئی ایس جوہر کے ساتھ بطور معاون کام کیا۔بطور ہدایت کار یش چوپڑہ نے اپنی فلمی زندگی کا آغاز 1959میں اپنے بھائی کے بینر تلے بننے والی فلم’دھول کا پھول‘ سے کیا۔ 1961 میں یش چوپڑہ کو ایک بار پھر اپنے بھائی کے بینر تلے بنی فلم’ دھرم پتر‘کو ڈائرکٹ کرنے کا موقع ملا۔اس فلم سے ہی بطور اداکارششی کپور نے اپنے کریئر کا آغاز کیاتھا۔1965میں فلم ’وقت‘یش چوپڑہ کی ہدایکاتکاری میں بننے والی فلم، بہترین فلموں میں شمار کی جاتی ہے۔اس فلم کو بالی ووڈ کی پہلی ملٹی اسٹارر فلم مانا جاتاہے۔’وقت ‘ میں بلر اج ساہنی،راج کمار،سنیل دت ،ششی کپور اور رحمٰن نے اہم رول ادا کئے تھے۔
1969میں یش چوپڑہ کے کریئر کی ایک اور سپر ہٹ فلم ’ اتفاق‘آئی۔دلچسپ بات یہ ہے کہ راجیش کھنہ اور نند اکی جوڑی والی سسپنس تھرلر اس فلم میں کوئی نغمہ نہیں تھاا اس کے باوجود ناظرین میں فلم نے زبردست پذیرائی حاصل کی اور اسے سپر ہٹ بنادیا۔ 1973میں آئی فلم ’داغ‘کے ذریعہ یش چوپڑہ نے فلم سازی کے شعبہ میں قدم رکھااور ’یش راج‘بینر کا قیام عمل میں آیا۔راجیش کھنہ،شرمیلا ٹیگور اور راکھی کی اداکاری والی یہ فلم ٹکٹ کھڑکی پر سپر ہٹ ثابت ہوئی۔1975میں آنے والی فلم ’دیوار‘ اور یش چوپڑہ کے فلمی کریئر کیلئے میل کا پتھر ثابت ہوئی۔1976میں یش چوپڑہ کی فلم ’کبھی کبھی‘آئی۔
رومانی پس منظر پر مبنی اس فلم میں یش چوپڑہ نے اینگری ینگ مین امیتابھ بچن سے رومانی کردار کرواکر فلم ناظرین کو حیرت میں ڈال دیا۔سمجھا جاتاہے کہ یش چوپڑہ نے امیتابھ بچن کے ذریعہ شاعر اورنغمہ نگار ساحر لدھیانوی کی زندگی سے جڑے پہلوؤں کو پردہ سیمیں پر پیش کیاتھا۔ 1981 میں آئی فلم ’سلسلہ‘یش چوپڑہ کی ہدایتکاری کی اہم فلموں میں شمار کی جاتی ہے۔مانا جاتا ہے کہ اس فلم میں امیتابھ۔ریکھا کے رشتوں پر مبنی فلم ہے۔1982سے 1989تک کا وقت یش چوپڑہ کیلئے برا ثابت ہوا۔ا س دوران ان کی ’ناخدا‘،’سوال‘،’فاصلے‘،’مشال‘،’وجے‘جیسی فلمیں باکس آفس پر ناکام ہوگئیں۔ 1989میں سری دیو اور رشی کپور کی اداکاری والی فلم’چاندنی‘کی کامیابی کے ساتھ یش چوپڑہ ایک بار پھر سے شہرت کی بلندیوں پر جاپہنچے۔1991میں آئی ’لمحے‘یش چوپڑہ کے فلمی کریئر کی اہم فلموں میں شمار کی جاتی ہے۔اس فلم کے ذریعہ یش چوپڑہ نے یہ دکھانے کی کوشش کی کہ محبت کی کوئی عمر نہیں ہوتی ہے۔
حالانکہ یہ فلم ناظرین کے معیار پر کھری نہیں اتری لیکن فلمی مبصرین کا کہناہے کہ یہ فلم یش چوپڑہ کے کریئر کی بہترین فلموں میں سے ایک ہے۔ 1995میں یش چوپڑہ کے کریئر کی ایک اور سپر ہٹ فلم ’دل والے دلہنیاں لے جائیں گے‘ آئی،نوجوانوں کی محبت پر مبنی کہانی شاہ رخ خاں کی بہترین اداکاری سے مزین یہ فلم سپر ہٹ ثابت ہوئی۔ 1997میں آئی فلم ’دل تو پاگل ہے‘ یش چوپڑہ کی ایک اور شاندار فلم شمار کی جاتی ہے۔مادھوری دیکشت ،شاہ رخ خاں اور کرشمہ کپور کی محبت کے تکون پر مبنی اس فلم کے ذریعہ یش چوپڑہ نے فلم ناظرین کو یہ بتایا کہ جوڑے آسمان میں ہی بنتے ہیں۔اس فلم کے بعد بطور ہدایت کار یش چوپڑہ نے کچھ برسوں تک فلموں کی ہدایت کا ری بند کردی۔ 2004میں آئی فلم ’ویر زارا‘سے یش چوپڑہ نے ایک بار پھر ڈائرکشن میں قدم رکھا۔
شاہ رخ خان اور پریٹی زنٹا کی اداکاری والی اس فلم کے ذریعہ یش چوپڑہ نے ناظرین کو بتایا کہ محبت کسی ملک کی سرحد میں قید نہیں رہ سکتی ۔اس فلم کی موسیقی سے جڑی دلچسپ کہانی یہ ہے آنجہانی مدن موہن کی 8دھنوں کو فلم میں استعمال کیا گیا۔ یش چوپڑہ کواپنے فلمی کریئر میں 11بار فلم فیئر ایوارڈ سے نوازا گیا۔فلم کے شعبہ میں نمایاں کام کرنے کے صلہ میں انہیں پروقار’دادا صاحب پھالکے‘ایوارڈ سے بھی نوازا گیا۔ یش چوپڑہ کی آخری فلم ’جب تک ہے جان‘ 2012میں آئی۔ اپنی فلموں کے ذریعہ ناظرین کو رومانس کا احساس کرانے والے یش چوپڑہ نے 21اکتوبر2012میں دنیا کو الوداع کہہ دیا ۔

Read all Latest entertainment news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from entertainment and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Remembering king of romance yash chopra on his death anniversary in Urdu | In Category: انٹرٹینمنٹ Entertainment Urdu News

Leave a Reply