پاکستانی اداکاروں پر پابندی پر بالی وڈ دو حصوں میں تقسیم

نئی دہلی:فلم ساز کرن جوہر اور فلم اور ٹیلی ویزن پروڈیوسرز گلڈ آف انڈیا کے مستقبل میں پاکستانی اداکاروں کے ساتھ کام نہیں کرنے کی یقین دہانی سے ‘اے دل ہے مشکل’ فلم خواہ دیوالی پر پرامن طریقے سے ریلیز ہو جائے لیکن اس مسئلے پر فلم انڈسٹری دو حصوں میں تقسیم ہوتی نظر آ رہی ہے۔ گلڈ زکے فیصلے کی چوطرفہ تنقید ہو رہی ہے جس میں مستقبل میں پاکستانی فنکاروں کے ساتھ کام نہکرنے اور فوج کی فلاح و بہبود فنڈ میں پانچ کروڑ روپے عطیہ دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔
فلم ساز اشوک پنڈت نے کہا “جن فلم سازوں کی فلموں میں پاکستانی اداکار ہیں انہیں پانچ کروڑ روپے عطیہ میں دینے کی بات کا کوئی تک نہیں ہے۔ عطیہ جیسا کام دل سے کیا جانا چاہئے نہ کہ زبردستی۔ یہ جبراََ وصولی ہے۔ انہوں نے پاکستانی فنکاروں والی فلم کی اسکریننگ نہیں کرنے کے فیصلے کی بھی تنقید کی تھی۔ اداکار تارا دیش پانڈے نے بھی مہاراشٹر نونرمان سینا (ایم این ایس) کے مطالبہ کی تنقید کرتے ہوئے کہا “دنیا کی سب سے بڑی فوج میں سے ایک کے نام پر پیسے کی وصولی کرنا اور اس کو ‘معاوضہ’ قرار دینا میری تمام سوچ اور تصور کو جھٹلادینے والا ہے۔

Read all Latest entertainment news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from entertainment and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Bollywood divided over the ban on pakistani artists in Urdu | In Category: انٹرٹینمنٹ Entertainment Urdu News

Leave a Reply