بچت کھاتوں سے نقد رقم نکالنے کی حد 13 مارچ سے ختم

ممبئی: ریزرو بینک (آر بی آئی) نے لوگوں کو ہولی کا پیشگی تحفہ دیتے ہوئے 13 مارچ سے بچت کھاتوں سے ایک ہفتہ کے اندر نقد رقم نکالنے کی حد ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔ اس سے قبل جزوی ریلیف دیتے ہوئے 20 فروری سے نقد رقم نکالنے کی حد بڑھا کر 50 ہزار روپے ہفتہ وار کی جائے گی۔ آر بی آئی کی مانیٹری پالیسی کمیٹی کے دو روزہ اجلاس کے بعد آج پالیسی پر مبنی بیان پر پریس کانفرنس میں آر بی آئی کے ڈپٹی گورنر آر گاندھی نے کہا بچت کھاتوں سے رقم نکالنے کے معاملے میں دو مراحل میں صورت حال معمول پر لانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔
ان کھاتوں سے موجودہ 24 ہزار روپے فی ہفتہ کی جگہ 20 فروری سے ہر ہفتے 50 ہزار روپے نکالے جا سکیں گے اور 13 مارچ سے نکالنے کی حد پوری طرح ختم کر دی جائے گی۔ بچت کھاتوں کے علاوہ دیگر کھاتوں اور اے ٹی ایم سے نکالنے کی حد 30 جنوری کو ہی ہٹا لی گئی تھی۔ انہوں نے کہا کہ اس کے ساتھ ہی بینکوں اور اے ٹی ایم سے رقم نکالنے کے معاملے میں مکمل طور پر نوٹ بند کیے جانے سے پہلے جیسی صورتحال بحال ہو جائے گی۔
آر بی آئی کے گورنر ارجت پٹیل نے پریس کانفرنس کے دوران ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ 27 جنوری تک نو لاکھ 92 ہزار کروڑ روپے گردش میں تھے جس میں پانچ سو اور دو ہزار روپے کے نئے نوٹوں کے ساتھ کم قیمت کے نئے اور پرانے نوٹ بھی شامل ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نقد رقم نکالنے کی میعاد ختم کئے جانے سے صورت حال اور بہتر ہوگی۔

Title: no limit on cash withdrawal from march 13 rbi | In Category: بزنس  ( business )

Leave a Reply